November 30, 2020

ناقدین کی تنقید کے جواب کے لیے حکومت ڈیجیٹل میڈیا ونگ بنانے کے لیے تیار

Read English version of this story here.

پی ٹی آئی حکومت نے اپنے اقدامات کے دفاع اور مخالفین کو مؤثر جواب دینے لے لیے ڈیجیٹل میڈیا ونگ بنانے کی وزیراعظم عمران خان سے باقاعدہ منظوری حاصل کر لی ہے۔ اور اسں کے لیے بیالیسں ملین روپوں کی منظوری بھی حاصل کرنے کی میڈیا اطلاعات بھی ہیں۔ وزارت اطلاعت میں قائم کردہ یہ ونگ ستائیس افراد پر مشتمل ہو گا۔ جن میں ایم پی ٹو اور ایم پی تھری کے تحت بھرتیاں بھی متوقع ہیں۔ یہ ونگ حکومتی پالیسیوں کا آن لائن دفاع کرے گا۔   


رواں مالی سال کے بجٹ میں ڈیجیٹل میڈیا ونگ کے لیے کوئی رقم مختص نہیں تھی اور سینئر صحافی رؤف کلاسرا کے مطابق وزیراعظم عمران خان کے اسں ونگ کے لیے بجٹ دینے کے فیصلے کو ان کے اپنے مشیر خزانہ حفیظ شیخ نے فنڈز کی کمی کا عذر بناتے ہوئے فنڈز دینے سے انکار کر دیا تھا ۔ اور ای سی سی نے بقول رؤف کلاسرا  ڈیجیٹل میڈیا ونگ کی وزارت اطلاعات کی بجٹ سمری مسترد کردی تھی۔اس حوالے سے اب وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان کا کہنا ہے کہ سپلیمنٹری گرانٹ وزارت خزانہ کا اختیار نہیں ہوتا، ای سی سی نے ڈیجیٹل میڈیا ونگ کا بجٹ وزیراعظم کی صوابدید پر چھوڑ دیا تھا۔ جس کی وزیراعظم نے اب منظوری دے دی ہے۔

Written by

Muhammad Arslan is a journalist and a team member of Media Matters for Democracy. He writes regularly on issues related to media freedom, regulation, and digital rights.

No comments

leave a comment